EntertainmentWomens

نا دا ن دل قسط نمبر 5

سنڈے کے دن تو حد ہے جو آپنی آپنی جہگوں سے ہل بھی جاے یہ لوگ
پتہ نہیں چھ دن کیسےآپنے کام کرتے ہےگھر ہوں تو مجال ہے ایک چمچ بھی اُٹھا دے
گڑیا! ہاتھ میں چاے کا کپ تھامے صحن کی طرف جاتے ہوے گھر والوں کو کھڑی کھڑی سُونا راہی تھی کہ اچنک ہی اِس کہ قدم روک گے اُور اس کی نظرے

صحن پر جم گی کُرسی پر بیٹھی ماہی برے مزے سے کُرسی کو جھولتے ہوے
ناجائز طریقےسے پاس ہونے جہاں کا سوچ راہی تھی-

ارے ماہی اسا کیا حزانہ مل گیا جو اکیلی بیٹھے مسکرا راہی ہو؟
ماہی جس سے آبھی پاس کی سننت ملنے ہی والی تھی کہ گڑیا کی آواز سے چونک گی

ہاے یہ کیا کیا آبھی سر میرے ہاتھ میں سننت دنے ہی والے تھے کہ
!!!ماہی نے حود کلامی کی

سامنے کُرسی پر بیٹھتے ہوے گڑیا نے چاے کا سیپ لتے ہو بولا
ماہی پاگل تو نہیں ہو گی پہلے اکیلے بیٹھی مسکرا رہی تھی اب حود ہی سے بات کررہی

ماہی جو ایک حسین وادیوں سے لوتی تھی جت سے آپنی کُرسی گڑیا کہ پاس لائی
آُور درگاہ کہ پیپرجی کہ قسے سوننے لگی پتہ ہے گڑیا شہربانوں بتا رہی تھی پیپر جی تعویز دیتے ہے جس سے بچے پاس ہو جاتے ہے مجھے بھی جانا ہے پیپر جی سےتعویزلنے-گڑیا !چاے کا کپ سامنے پری ٹیبل پرراکھتے بوے بولی پاگل ہے کیسے جاے گی؟ ارے صبح صبح کہا جا رہے ہے آپ لوگ علی کی آواز نے ہمیں علی کی موجودگی کا احساس دلیا

درگاہ جاننا ہے ماہی نے اسے کوئی بتاے اگر تعویزوں سے پاس ہوا جاتا تو کوئی فیل کہا ہوتا

ارے گڑیا جانے دوعلی نے شرارت سے مسکرتے ہوے کہا آگر ماہی پاس ہو گی

تو آگلا نمبر میرا ہوگا علی کی بات سونتے ہی گڑیا اُور علی ہنس نے لگے

اسَّلامُ عَلَیکُم
ایک بزُرگ جو کہ مزار کے باہر کھڑے تھے

ہمیں پیپر جی سے ملنا ہے سمیرا نے سلام کرتے ہوےؑ فورََ آپنی بات کمپلیٹ کی

آ ہوآ ہو بٹھے نے جاوُ تے جوتی اتھے لا دُویہ کہتے ہوے بزُرگ جوتی سٹینڈ کہ پاس رکھے سٹول پر جا بیٹھےہم نے جوتی اُتری اُور درواز کھول کے ایک برے

سےہال میں داحل ہو گے وہاں کـچھ لوگ بیٹھ کہ نعت شریف پرھ راہے تھے عورتوں

مردوں کا رش تھا سب آ پنی آپنی باری ےسے پیپر جی کے پاس جا راہے تھے

جہاں دم بھی کیا جاتا تھا اُور دُعا بھی کی جاتی تھی

ہماری باری بھی آئی ہمیں بھی دم کیا گیا اُور مسلے کے لیے دُعا کی گی اُور ساتھ ہی ہمیں میلاد کی محفل میں آنے کی داعوت بھی دیگی

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button