Islamic

قیامت کی 27 نشانیاں جو کہ پوری ہو چکی ہیں

قیامت کی 27 نشانیاں جو کہ پوری ہو چکی ہیں. رسول اللہ صلی اللہ علیہ والہ وسلم نے ارشاد فرمایا قیامت کی نشانیاں تسبیح کے دانوں کی طرح ہیں. جب تسبیح ٹوٹتی ہے تو دانے بکھر جاتے ہیں. رسول اللہ صلی اللہ علیہ والہ وسلم نے قیامت کی بہت سی نشانیاں بیان کی ہیں. آج میں آپ دوستوں کے سامنے ان میں سے چند ایک کا ذکر کروں گا. رسول اللہ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے ارشاد فرمایا جب قیامت نزدیک ہوگی تو لوگ قرآن مجید کو موسیقی کے طرز پر تلاوت کریں گے.

 

 

اسلام پر عمل کرنے والوں پر لوگ تعجب کریں گے. اور انہیں نیا سمجھیں گے. آنے والا زمانہ گزرے زمانے سے بدتر ہوگا. گناہ کرنا آسان ہو جائے گا اور گناہ کو ہی سمجھا جائے گا. مسلمان مالدار ہوں گے مگر دیندار نہیں ہوں گے. قتل و غارت زیادہ ہو جائے گا. قاتل اور مقتول کو معلوم ہی نہیں ہوگا کہ میں کیوں قتل ہو رہا ہوں یا پھر میں قتل کیوں کر رہا ہوں؟ دنیا کے مالدار لوگ بخیل ہو جائیں گے. جہالت عام ہو جائے گی. لوگ دنیاوی تعلیم یافتہ ہوں گے مگر دینی علم سے غافل ہوں گے. لوگ زکوۃ کے حقدار نہیں ہوں گے. مگر زکوۃ کی طلب کریں گے عورتیں کپڑے پہن کر بھی ننگی ہوں گی یعنی کپڑے اتنے پتلے ہوں گے جن سے ان کا جسم نظر آئے گا. زمانے میں برکت ختم ہو جائے گی. سال مہینے جیسا مہینہ ہفتے جیسا ہفتہ دن جیسا اور دن گھنٹے جیسا گزرے گا. عرب کی سرزمین پر فراخی آئے گی اور مدینہ منورہ کی آبادی زیادہ ہو جائے گی.
لوگ صحیح احادیث سے انکار کر دیں گے اور جھوٹی احادیث بیان کریں گے. مال سے محبت کی وجہ سے بیوی بھی اپنے شوہر کے ساتھ تجارت میں شریک ہوگی. شراب کا استعمال زیادہ ہو جائے گا. لوگ شرابی مشروبات مختلف نام رکھ کر استعمال کریں گے. ہر آدمی چاہے گا کہ اس کا جسم دبلا اور مضبوط ہو جائے۔ بے حیا عورتیں اور موسیقی کے آلات زیادہ ہو جائیں گے. لوگوں کی نماز اور زندگی میں خشوع ختم ہو جائے گا. جھوٹ بولنا عام ہو جائے گا. اور لوگ جھوٹی گواہی دیں گے. دین پر عمل کرنا ایسا ہوگا. جیسے آگ کا شعلہ ہاتھ میں پکڑا ہو. زنا کرنا آسان اور زنا کے اسباب زیادہ ہو جائیں گے۔ مسلمان ہر عمل میں کفار کی تابعداری اور پیروی کریں گے. قرآن مجید کو ذریعے معاش بنا لیں گے. کفر آسان ہو جائے گا. انسان صبح کو مسلمان شام کو غافل اور صبح کو کافر ہوگا. مگر اسے معلوم ہی نہیں ہوگا. سود کھانا عام ہو جائے گا. فتنے زیادہ ہوں گے. اور دینی علم کم ہو جائے گا. مرد کم اور عورتیں زیادہ ہو جائیں گی.
میرے محترم عزیز تو. نبی کریم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے قیامت کی جو نشانیاں بیان کی ہیں ان میں سے زیادہ تر پوری ہو چکی ہیں. اور چند ایک رہ گئی ہیں ۔ جن کا پورا ہونا باقی ہے. جیسے کہ دجال کا فتنہ، حضرت عیسی علیہ سلام کا زمین پر دوبارہ تشریف لانا، حضرت امام مہدی علیہ سلام کا آنا. سورج کا مغرب سے طلوع ہونا. توبہ کے دروازوں کا بند ہونا. اس طرح چند ایک بڑی بڑی نشانیاں باقی ہیں جو ہونی ہے. آپ دوستوں کے سامنے میں نے جتنی نشانیاں بیان کی ہیں ان میں سے یقینا سب کی سب پوری ہو چکی ہیں۔ لہذا ہم سب کو چاہئے کہ ذیادہ سے ذیادہ توبہ کریں۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Check Also
Close
Back to top button